بریکنگ نیوز

ملک میں تعلیم کے فروغ کیلئے نجی تعلیمی ادارے اہم رول ادا کر رہے ہیں،اسسٹنٹ کمشنر کلر سیداں

4,2,16photo
کلر سید ا ں (پر و یز و کی سے)اسسٹنٹ کمشنر کلر سیداں چوہدری ربنواز خان منہاس نے کہا ہے کہ ملک میں تعلیم کے فروغ کیلئے نجی تعلیمی ادارے اہم رول ادا کر رہے ہیں جس سے شرح خواندگی میں کافی حد تک بہتری آئی ہے۔تعلیم کے بغیر کوئی قوم اپنی بقاقائم نہیں رکھ سکتی۔طلباء و طالبات کی صلاحتیوں کو اجاگر کرنے اور انہیں جدید اور بہتر تعلیم کی فراہمی کیلئے مزید پیکج تیار کئے جا رہے ہیں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز کلر سیداں میں قائم ایک نجی تعلیمی ادارے دی سمارٹ سکول میں کڈزفن فےئر کے سلسلہ میں منعقدہ ایک پروقار تقریب سے مہمان خصوصی کی حثییت سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔سکول کی پرنسپل محترمہ ماہ رخ عارف اور ڈائریکٹر الیاس خان بھی اس موقع پر موجود تھے۔اے سی نے اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بچے قوم کا عظیم سرمایہ ہیں ،آج کا بچہ کل کا قائد ہے،اس لئے ضروری ہے کہ والدین اور اساتذہ مل کر ان کی تعلیم و تربیت میں اپنا کردار ادا کریں۔سکول کی پرنسپل ماہ رخ نے اپنے خطاب میں کہا کہ کوالٹی ایجوکیشن کا فروغ ہمارے ادارے کی اولین ترجیح ہے ۔انہوں نے کہا کہ ادارے میں اعلی تعلیم یافتہ اسٹاف بچوں کی بہتر تعلیم و تربیت پر مامور کیا گیا ہے جن کا مقصد بچوں کی صلاحتیوں میں نکھار پیدا کرنا ہے۔ادارہ میں کمپیوٹر لیب سمیت سائنس لیب اور دیگر جدید قسم کی تدریسی سہولیات میسر ہیں ۔ناظرہ کی کلاسز بھی جاری ہیں اور انگلش کی اسپیشل کلاسز کا بھی اجراء ہو چکا ہے تا کہ بچوں کو انگریزی میں عبور حاصل ہو سکے۔انہوں نے بتایا کہ ہمارا مقصد بچوں کو رٹا سسٹم سے نکال کر انہیں لکھنے اور پڑھنے کی طاقت فراہم کرنا ہے۔انہوں نے کہا کہ ادارے میں جلد ہی کراٹے کلاسز بھی شروع کی جا رہی ہیں تا کہ مشکل حالات میں بچوں میں خو د کو دفاع کرنے کی صلاحیت موجود ہو۔انہوں نے کہا کہ مارچ میں ڈسپلن اور سلف گرمنگ کلاسز بھی شروع کی جا رہی ہیں ۔انہوں نے کہا کہ ملک میں 230 سے زائد برانچیں کام کر رہی ہیں جنہوں نے تعلیمی میدان میں ایک انقلاب پربا کر دیا ہے ۔تقریب میں ورائٹی شو،گھڑ ڈانس ،نشانہ بازی سمیت مزاحیہ خاکے اور ٹیبلو شو بھی پیش کیا گیا جسے حاضرین نے بے حد پسند کیا اور کھل کر داد دی۔تقریب میں بچوں کے والدین اور معززین علاقہ کی کثیر تعداد موجود تھی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*